Political Milestones

Timeline

1947
Monday, 27 Jan

Dual Voting Right دہرے ووٹ کا حق

The First Constitution of Pakistan, as passed in 1956, provided for “the Principle of Female Suffrage and Women’s Reserved Seats” — A dual voting right, under which the women were not only eligible to vote for a general seat but also to vote for the reserved seats reserved, exclusively for women.

پاکستان کے پہلے آئین کی منظوری 1956 میں دی گئی جس میں “خواتین کے حق رائے دہی اور خواتین کی مخصوص نشستوں کا اصول” طے کیا گیا – یہ اصول خواتین کو دہرے ووٹ کا حق دیتا ہے جس کے تحت خواتین نہ صرف جنرل نشستوں کے لئے ووٹ دے سکتی ہیں بلکہ صرف خواتین کے لئے مخصوص نشستوں کے لئے بھی اپنا حق رائے دہی استعمال کر سکتی ہیں۔

1972
Friday, 28 Apr

First Woman Deputy Speaker پہلی خاتون ڈپٹی سپیکر

Mrs Ashraf Khatoon Abbassi was the first woman to become the Deputy Speaker of the National Assembly in 1972.

بیگم اشرف خاتون عباسی، پہلی خاتون تھیں جو 1972 میں قومی اسمبلی کی ڈپٹی سپیکر بنیں۔

Friday, 28 Apr

First MNA of Foreign Origin پہلی غیرملکی نژاد خاتون ایم این اے

Mrs Jehanzeb Ali Jenifer Mosa Qazi was the first Pakistani National of foreign origin to become the Member of the National Assembly in 1972 on the ticket of National Awami Party.

بیگم جہانزیب علی جینیفر موسیٰ قاضی، پہلی غیرملکی نژاد پاکستانی شہری تھیں جو 1972 میں نیشنل عوامی پارٹی کے ٹکٹ پر قومی اسمبلی کی رکن بنیں۔

Friday, 28 Apr

First Woman Parliamentary Secretary پہلی خاتون پارلیمانی سیکرٹری

Ms Nargis Naeem was the first woman to be appointed as Parliamentary Secretary in the National Assembly of 1972-1977

محترمہ نرگس نعیم پہلی خاتون تھیں جو 1972-1977 کی قومی اسمبلی میں پارلیمانی سیکرٹری کے عہدے پر فائز ہوئیں۔

1973
Friday, 27 Apr

Constitution of Pakistan آئینِ پاکستان

The Constitution Committee, which drafted the historic 1973 Constitution, had three women Members, namely: Nasim Jahan, Mrs Jennifer Qazi and Begum Ashraf Abbasi.

1973 کے تاریخی آئین کا مسودہ تیار کرنے والی آئین کمیٹی میں تین خواتین ارکان شامل تھیں: نسیم جہاں، بیگم جینیفر قاضی اور بیگم اشرف عباسی۔

1974
Saturday, 27 Apr

Woman Governor خاتون گورنر

In 1974, Begum Rana Liaqat Ali Khan was appointed as Governor of the Province of Sindh. She remains the only woman till date to be appointed as Governor of any province in Pakistan.

1974 میں بیگم رعنا لیاقت علی خان کو گورنر صوبہ سندھ مقرر کیا گیا۔ وہ ابھی تک واحد خاتون ہیں جو پاکستان کے کسی صوبے کے گورنر کے عہدے پر فائز  ہوئی ہیں۔

Sunday, 28 Apr

First Woman Senator پہلی خاتون سینیٹر

Samia Usman was elected to the Senate in 1974 to become the first woman Senator.

1974 میں سمیعہ عثمان رکن سینیٹ منتخب ہو کر پہلی خاتون سینیٹر بنیں۔

1977
Thursday, 28 Apr

First Woman MNA پہلی خاتون ایم این اے

Begum Naseem Wali Khan was the first woman to be elected from a General Seat in any National Election. She won from two constituencies of N.W.F.P. in the 1977 elections. She remains the only woman till date to get elected from any general seat of N.W.F.P now Khyber Pakhtunkhwa Province. Begum Naseem, however, did not take the oath of her seat and never served as a Member of the National Assembly.

بیگم نسیم ولی خان پہلی خاتون تھیں جو کسی قومی انتخاب میں جنرل نشست پر منتخب ہوئیں۔ انہوں نے 1977 کے انتخابات میں این ڈبلیو ایف پی کے دو حلقوں سے کامیابی حاصل کی۔ وہ ابھی تک واحد خاتون ہیں جو این ڈبلیو ایف پی یعنی موجودہ خیبرپختونخواہ کی کسی جنرل نشست سے منتخب ہوئیں۔ تاہم بیگم نسیم ولی خان نے اپنی نشست کا حلف نہیں لیا اور رکن قومی اسمبلی کے طور پر کبھی بھی خدمات انجام نہیں دیں۔

1985
Saturday, 27 Apr

Women Ministers خواتین وزراء

Muhammad Khan Junejo was the first Prime Minister (1985-1988) to have women Ministers in his Cabinet. Consequently, Begum Kulsoom Saifullah and Begum Afsar Raza Qazalbash served as full Ministers while Begum Rehana Aleem Mashhadi and Dr Noor Jehan Panezai were made Ministers of State.

محمد خان جونیجو پہلے وزیراعظم (1985-1988)  تھے جنہوں نے اپنی کابینہ میں خواتین وزراء کو شامل کیا۔ لہٰذا، بیگم کلثوم سیف اللہ اور بیگم افسر رضا قزلباش نے پہلی بار وفاقی وزراء کے طور پر خدمات انجام دیں جبکہ بیگم ریحانہ علیم مشہدی اور ڈاکٹر نور جہاں پانیزئی کو وزیر مملکت بنایا گیا۔

1988
Thursday, 28 Apr

First Woman Prime Minister پہلی خاتون وزیر اعظم

The only woman of Pakistan to have made world history remains Mohtarma Benazir Bhutto. She was elected as World’s youngest Prime Minister at the age of 35 and remains the first woman in the Muslim World to be elected to this august office. She also remains the only woman to become Pakistan’s Prime Minister twice.

محترمہ بے نظیر بھٹو نے پاکستان کی واحد وزیراعظم کے طور پر خدمات انجام دے کر عالمی سطح پر ایک نئی تاریخ رقم کی۔ وہ 35 سال کی عمر میں دنیا کی سب سے کم عمر وزیراعظم بنیں اور اس اعلیٰ ترین عہدے پر فائز ہونے والی مسلم دنیا کی پہلی خاتون ہیں۔ اس کے علاوہ، وہ واحد خاتون ہیں جو دو مرتبہ پاکستان کی وزیراعظم بنیں۔